Monthly Archives: February, 2009

Poetry by Hazrat Mehboob-e-Zaat (1898 – 1961) (علی حق کے پیارے)


علی حق کے پیارے ید اللہ علی ہیں

وہ مولا ہمارے دلارے علی ہیں

وہ بیت الحرم میں ولادت لئے ہیں

شرافت صداقت امامت لئے ہیں

کیا درجہ حق نے ہے عالی علی کا

نبی ﷺ کے برادر امام ان سبھی کا

کیا وصف قرآن نے عالی وہ ذیشان

مراتب دیئے جو کہ سب تھے عالی شان

وہ خیبر کا در تھا اکھاڑا علی نے

کیا کفر غارت اس شاہ ولی نے

پڑھا کلمہ سب نے یہ شانِ علی ہے

ہوا جگ میں روشن وہ نام علی ہے

تھراتے تھے کافر یہ قابل نگاہ ہے

دکھائے وہ جوہر کہ خلقت گواہ ہے

میں قربان علی پر اس شاہِ جری پر

وہ کوثر کے ساقی امام علی پر

یہ عاجزؔ بھی دیوانہ اُلفت علی ہے

شفاعت کا طالب اور طالب علی ہے

Poetry for Hazrat Mehboob-e-Zaat (1898 – 1961) written by Murideen:


Poetry for Hazrat Mehboob-e-Zaat (1898 – 1961) written by Murideen:

This Manqabat (منقبت) was written by Kalifa Bashir Aziz (from Kamaliya).

 

تری جو دل سے یا بھلاؤں تو کفر ہے

لب پہ کسی کا نام جو لاؤں تو کفر ہے

میری جبیں تیری چوکھٹ پہ جھک گئی

یہ سر کسی کے در پہ جھکاؤں تو کفر ہے

میری نظر نے اآپ کا کیا ہے انتخاب

تجھ سا جو کوئی اور بناؤں تو کفر ہے

بیشک حسیں بہت ہیں مانا حوران خلد

ان سے اگر مین آنکھ ملاؤں کو کفر ہے

تجھ سے کیا ہے عہدِ وفا اے جانِ زندگی

دامن کو تیرے چھوڑ کے جاؤں تو کفر ہے

ممنون تیرے لطف و کرم کا حضور میں

تجھ بن کسی کا شکر بجا لاؤں تو کفر ہے

دست سوال آپ کے آگے بڑھا دیا

غیروں کے آگے ہاتھ پھیلاؤں تو کفر ہے

دیوانہ تیرا ہو گیا عزیزؔ دیوان جان من

دیوانہ اب کسی کا کہلاؤں تو کفر ہے

Hadith-e-Qudsi # 25


On the authority of Abu Hurayrah (may Allah be pleased with him), who said that the Messenger of Allah (Sal Allahau Alaihi Wa Aalihi Wasallam) said: Allah (Mighty and Sublime be He) said:

Whosoever shows enmity to someone devoted to Me. I shall be at war with him. My servant draws not near to Me with anything more loved by Me than the religious duties I have enjoined upon him, and My servant continues to draw near to Me with supererogatory works so that I shall love him.

When I love him I am his hearing with which he hears, his seeing with which he sees, his hand with which he strikes and his foot with with he walks. Were he to ask [something] of Me, I would surely give it to him, and were he to ask Me for refuge, I would surely grant him it. I do not hesitate about anything as much as I hesitate about [seizing] the soul of My faithful servant: he hates death and I hate hurting him.

It was related by al-Bukhari.

Hadith-e-Qudsi # 24


On the authority of Abu Sa’id (may Allah be pleased with him), who said that the Messenger of Allah (Sal Allahau Alaihi Wa Aalihi Wasallam) said:

If Allah has loved a servant [of His] He calls Gabriel (on whom be peace) and says: I love So-and-so, therefore love him. He (the Prophet pbuh) said:

So Gabriel loves him. Then he (Gabriel) calls out in heaven, saying: Allah loves So-and-so, therefore love him. And the inhabitants of heaven love him. He (the Prophet pbuh) said: Then acceptance is established for him on earth.

And if Allah has abhorred a servant [of His], He calls Gabriel and says: I abhor So-and-so, therefore abhor him. So Gabriel abhors him. Then Gabriel calls out to the inhabitants of heaven: Allah abhors So-and-so, therefore abhor him. He (the Prophet pbuh) said: So they abhor him, and abhorrence is established for him on earth.

It was related by Muslim (also by al-Bukhari, Malik, and at-Tirmidhi).

Poetry for Hazrat Mehboob-e-Zaat (1898 – 1961) written by Murideen:


Poetry for Hazrat Mehboob-e-Zaat (1898 – 1961) written by Murideen:

This Manqabat (منقبت) was written by Sahibzada Syed Shah Kamal Mohy-ud-Din Gillani.

سرکار منڈیراں سے لو ہم نے لگائی

یہ عزت و شہرت بھی سرکار سے پائی

دنیا بھی یہ مانے گی یہ ہادی اکبر ہیں

یہ محسنِ اعظم ہیں اب ان کی دہائی ہے

قدموں سے ہمیں ان کے یہ شرف ملا ہے

دربارِ رسالت میں ہماری بھی رسائی ہے

اوصاف نہ اچھے نہ اعمال ہمارے

فیضان پہ بس ان کے امید لگائی ہے

دل و جان قربان کروں آقا کے قدموں پر

آقا نے مجھے اپنی صورت جو دکھائی ہے

یہ ان کی عنایت ہے کمالؔ ان کا کرم ہے

تاثیر تیری بات میں اتنی بھی جو آئی ہے

Shaykh-ul-Mashaykh visits Golrah Sharif yesterday


Shaykh-ul-Mashaykh Shaykh Pir Syed Muhammad Mubarak Ali Gillani Qadri, Sajjada Nasheen Astana Aliyah, Qadriyah, Fazliyah, Ahmad Hussainiyah, Afzaliyah, Mundair Syedan Sharif visited Golrah Sharif yesterday, 18th February 2009, for Fateha of Pir Syed Naseer-ud-Din Naseer Gillani Chishti.

He met with Hazrat Pir Abdul Haq Sahib, Hazrat Pir Jalal-ud-Din Sahib, Hazrat Pir Ghulam Nizam-ud-Din Sahib (Jami Sahib). He said Fateha on the Mizaar of Hazrat Pir Syed Mehr Ali Shah Sahib Gillani Chishti, Hazrat Babo G, Hazrat Syed Moin-ud-Din Gillani, Hazrat Syed Pir Naseer-ud-Din Naseer Gillani.

Shajarah Mubarak


Assalam o Alaikom.

To see the Shajrah of Shaykh-ul-Mashaykh (grandson of Mehboob-e-Zaat) and other grandsons and great-grandsons of Mehboob-e-Zaat, visit http://www.gilani.com.pk/pics/gms.gif

This Shajrah is up-to-date till now. This Shajrah is direct Shajrah. Only the names of the brothers are written not of the sons of brothers untill Mehboob-e-Zaat. The name of the Peer of Mehboob-e-Zaat is in green (Fateh Ali Shahbaz). The names of the descendants of Muhammad Fateh Ali Shahbaz are not mentioned. After Mehboob-e-Zaat, the Shajrah is complete i.e. it include the names every son, grandson and great-grandson of Hazrat Mehboob-e-Zaat.

 

السلام علیکم

حضرت محبوبِ ذات قدس سرہُ العزیز کے بڑے پوتے شیخ المشائخ اور دیگر پوتوں اور پڑپوتوں کا شجرہ آپ اس ویب سائٹ پر دیکھ سکتے ہیں

http://www.gilani.com.pk/pics/gms.gif

یہ شجرہ آج تک مکمل ہے۔ یہ شجرہ سیدھا سیدھا غوثِ پاک سے محبوبِ ذات تک ہے۔ ان کے باپ دادا کے صرف بھائوں کے نام لکھیں ہیں اور بھائیوں کی اولاد کے۔

سرکارِ عالی حضرت محبوبِ ذات کے پیر کا نام سبز رنگ میں لکھا ہے جو ہے محمد فتح علی شہباز۔ ان کی اولاد کا نام اس شجرہ میں نہیں لکھا گیا۔

حضرت محبوبِ ذات کے بعد شجرہ بالکل مکمل ہے یعنی حضرت محبوبِ ذات قدس سرہ العزیز کے تمام بیٹوں، پوتوں اور پڑتوں کا نام شامل ہے۔

یا شیخ المشائخ


YA-SHA~1

Pir Naseer-ud-Din Naseer passed away yesterday


اسلام آباد …جنگ نیوز…صدر آصف علی زرداری اور وزیراعظم سید یوسف رضا گیلانی نے معروف بزرگ، روحانی شخصیت اور ممتاز دانشور و شاعر پیر نصیر الدین شاہ آف گولڑہ شریف کے انتقال پر گہرے رنج و غم کا اظہار کیا ہے۔ صدر اور وزیراعظم نے اپنے الگ الگ تعزیتی پیغامات میں یپر نصیر الدین کی اپنے مریدین میں مذہبی تعلیمات اور بھائی چارے، رواداری اور افہام و تفہیم کا پیغام عام کرنے کی کوششوں کو سراہا۔ انہوں نے کہا کہ اس سلسلے میں پیر نصیر شاہ کی خدمات کو مدتوں یاد رکھا جائے گا۔ صدر اور وزیراعظم نے دعا کی کہ اللہ تعالیٰ مرحوم کو اپنے جوار رحمت میں جگہ اور لواحقین کو یہ صدمہ برداشت کرنے کا حوصلہ دے۔

for more details see:

http://daily.urdupoint.com/todayNewsLive.php?news_id=89968&featured=1&cat_id=8

 

The link to the site of Pir Naseer-ud-Din Naseer is given below:

http://pirnaseer.sehamtech.com/

Pir Syed Naseer ud Din Naseer passed away


Inalila hai wa ina ilay hai rajeon

Pir Syed Naseer ud Din Naseer passed away yesterday 13 February 2009

Namaze Janaza on 14 Feb 09 after Asar Prayer in Golra Sharif, Sector E11, Islamabad