Hazrat Ali’s quote # 39


کفر و شرک

کُفر کے چار رکن ہیں۔ کرید، لڑائی، حق سے رو گردانی، افتراق اور دشمنی۔

جو شخص بے کار کی چھان بین اور کرید کرتا ہے وہ حق کی طرف نہیں پلٹتا۔ جو بے علمی کی وجہ سے زیادہ لڑتا ہے وہ راہِ راست دیکھنے سے ہمیشہ عاجز رہتا ہے۔ جو حق سے پھر جاتا ہے اس کے نزدیک اچھائیاں برائی بن جاتی ہیں اور برائیاں اچھائی، اور اس کے پاس گمراہی کا نقشہ چھا جاتا ہے۔ جو افتراق اور دشمنی کرتا ہے اس پر اسی کے راستے دشوار اور کاروبار سخت ہو جاتا ہے اور اس کے لیے چھٹکارا پانا مشکل ہو جاتا ہے۔ شک کے چار حصے ہیں۔ قوت کے مظاہرے کے لیے بحث، خواہ مخواہ کا ڈر، بلا وجہ کا اندیشہ اور غلامی (باطل)۔

جس نے فضول بحث مباحثے کو دین سمجھا اس کی شام صبح میں نہ بدلے گی یعنی وہ گمراہی سے راہِ ہدایت کی طرف نہ آئے گا۔ جو سامنے کی چیزوں سے ہول کھائے گا وہ پچھلے پیروں پلٹ جائے گا اور کوئی اقدام ہی نہ کر سکے گا۔ جو بے کار کے شبہات میں مبتلا ہو گا اسے شیطانوں کے قدم روند ڈالیں گے۔ جو دنیا و آخرت کو تباہ کرنے کے لیے خم ہو گیا وہ دونوں جگہ مرا، کہیں کا نہ رہا۔

If you want to receive or deliver something related to this post, feel free to comment.

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s

%d bloggers like this: