Hazrat Ali’s quote # 363


زوال

 

دنیا میں انسان ایک نشانہ ہے، جس پر موت تیر چلاتی رہتی ہے۔ وہ کسی لٹے ہوئے قافلے کی طرح ہے کہ مصیبتیں اس پر ہر طرف سے آتی ہیں۔ اسے ہر گھونٹ میں اچھو اور ہر نوالے میں دکھ ہے۔ کسی شخص کو کوئی دوسری نعمت اس وقت ملتی ہے جب ایک نہ رہے۔ وہ زندگی کے کسی نئی دن کا استقبال اس وقت کرتا ہے جب موت کا ایک وار کم کر دے۔ ہم تو موت کے مددگار ہیں اور فنا کے نشانے، تو پھر بقاء کی اُمید کیسے کریں، جب کہ دن رات کسی چیز کو بلند ہوتے نہیں دیکھتے بلکہ دونوں اس بنائی ہوئی چیز کو گرانے کے لیے جلدی جلدی پلٹ کر آتے ہیں اور انھوں نے خود جسے جمع کیا ہے اسے متفرق کر دیتے ہیں۔

If you want to receive or deliver something related to this post, feel free to comment.

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s

%d bloggers like this: